میرے والد مسلمان اور والدہ ہندو ہیں لیکن میں خود کو ’انسان‘ کہتا ہوں، سلمان خان

نئی دہلی: معروف بھارتی اداکار سلمان خان کا کہنا ہے کہ ان کے والد مسلمان اور والدہ ہندو ہیں لیکن وہ خود کو ہندو یا مسلمان کے بجائے ’انسان‘ کہتے ہیں۔

ہندوستان ٹائمز کی 15 ویں لیڈرز شپ سمٹ کے دوران بھارت کے مختلف شعبہ جات سے تعلق رکھنے والے متعدد افراد نے اپنے خیالات کا اظہار کیا۔ جب کہ انٹرٹینمنٹ انڈسٹری کی نمائندگی کرتے ہوئے بالی ووڈ کے سلطان سلمان خان بھی اس سمٹ میں شریک ہوئے اور اپنے والدین ،مذہب، ذاتی زندگی اور رئیلیٹی شو بگ باس کے حوالے سے بہت سی باتیں منظر عام پر لے کرآئے۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: سلمان خان ہندو یا مسلمان؟

سمٹ کے دوران سلمان خان نے انڈیاٹوڈے گروپ کے سابق وائس چیئرمین، ایڈیٹران چیف دی پرنٹ اور معروف بھارتی صحافی  شیکھرگپتا سے بات چیت کے دوران کہا کہ بالی ووڈ کا کوئی مذہب نہیں ہے۔ میرے والد سلیم خان مسلمان ہیں اوروالدہ سشیلا کا تعلق ہندو مذہب سے ہے لیکن میں خود کو’انسان‘کہتا ہوں۔ انہوں نے کہا فلم انڈسٹری میں کام کرنے والے تمام لوگ چاہے ان کا تعلق کسی بھی مذہب سےہو سب مل کر کام کرتے ہیں۔ انڈسٹری میں کام کرنے والا ہر شخص چاہے وہ کارپینٹر ہو، اسپاٹ بوائے ہو، لائٹ مین ہو، ہیرو، ہیروئن ہوں، ہدایت کارہویا پروڈیوسرہو کوئی بھی اس بات کو محسوس نہیں کرتا کہ کون کس مذہب سے تعلق رکھتا ہے۔ یہاں ہندو، مسلم،سکھ، عیسائی جیسا کچھ نہیں ہے۔ جب کہ کوئی اونچ نیچ بھی ہماری انڈسٹری میں نہیں ہے۔ یہاں کام کرنے والا ہر انسان عزت کا مستحق ہے۔ سلمان خان کی اس بات سے صاف ظاہر ہے کہ وہ خود کو ہندو یا مسلمان کے بجائے ’انسان‘قرار دیتے ہیں اور’انسانیت‘ان کے نزدیک سب سے بڑا مذہب ہے۔

سمٹ کے دوران سلمان خان نے بھارت کےمتنازعہ ترین رئیلٹی شو بگ باس کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا میڈیا میں یہ باتیں گردش کررہی ہیں کہ بگ باس کا مواد پہلے سے طے شدہ ہوتا ہے اور گھر میں موجود لوگ بگ باس کے احکامات کے مطابق لڑائی جھگڑے کرتے ہیں لیکن یہ بالکل غلط ہے۔ آپ خود سوچیں کہ بگ باس کی ٹیم شو کو ہربارایک نیا موڑ دیتی ہے تو یہ کس طرح پہلے سے طے شدہ ہوسکتا ہے۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: سلمان خان کی اذان کے احترام والی ویڈیو وائرل

اس کے علاوہ سلمان خان نے اپنے اندرکے ڈر سے لڑنے کا طریقہ بتاتے ہوئے کہا کہ اپنے ڈر سے بھاگنے کے بجائے اس کاسامنا کریں جب کہ انہوں نے اپنی زندگی کی پریشانیوں کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ میں آج میں جیتا ہوں۔ اپنی زندگی سے پریشانیاں ختم کرنے اور خوشگوار زندگی گزارنے کے لیے زیادہ سوچ بچار کے بجائے موقع کی مناسبت سے فوراً فیصلے کرتا ہوں۔

واضح رہے کہ اس سے قبل سلمان خان نے جودھپورعدالت میں غیر قانونی ہرن کے شکار کے کیس کی سماعت کے دوران مجسٹریٹ کے سامنے کہا تھا کہ وہ بیک وقت ہندو اور مسلمان ہیں اور بھارتیہ ہونے کے باعث ایک بھارتی بھی ہیں۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: سلمان خان نے زندگی کے کئی رازوں سے پردہ اٹھادیا

اس کے علاوہ رواں سال اپریل میں ان کی ایک پرانی ویڈیو سوشل میڈیا پر بہت وائرل ہوئی تھی جس میں وہ اذان کے احترام میں خاموش ہوجاتے ہیں اور شو کے میزبان کو بھی خاموش رہنے کا اشارہ کرتے ہیں۔

The post میرے والد مسلمان اور والدہ ہندو ہیں لیکن میں خود کو ’انسان‘ کہتا ہوں، سلمان خان appeared first on ایکسپریس اردو.