Salman Khan’s film ‘Race 3, the distribution of Bollywood’s biggest offer in terms of rights.

Bollywood movie star Salman Khan’s movie ‘Race 3’ has been offered an amount of Rs 190 crore in the Distribute Rights Department, which is a great opportunity for the film world.

Salman Khan’s film ‘Race 3’ has been presented on June 15 and the movie has been shortly exposed.

Film shooting is almost complete and movie editing continues, but before the movie trailer is released, large production houses have stood in line to purchase the movie.

According to the Indian media, for purchase of Salman Khan’s ‘Race 3’ Distribute Rights ‘Focus Star Studios’, ‘Reliance Entertainment’, ‘Yash Raj Films’ and ‘Eros International’ had made bids but ‘Aeros International’ The most heavily offered is surprised by everyone.

According to the news circulation in Indian media, film producer Ramesh Toriani has been given ‘ARORO International’ to a 190-crore film distributor’s rights, which is still the case for any movie’s distribution rights Is offered from

The production house has been awarded 160 million security deposit and 30 million printing and advertisement.

Yash Raj Films and Fox Stars are also surprised on offering a huge compensation from the Aerospace International and also came out of the bid.

Shortly after the heavy offer, film distributors are likely to agree with the rights of the film, but the film’s satellite rights are apart from it.

Remember that Salman Khan’s film ‘Tubelight’ had already contracted Rs 132 crore in the Distribute Rights Department.

The post Salman Khan’s film ‘Race 3, the distribution of Bollywood’s biggest offer in terms of rights. appeared first on Pakistan Showbiz.

حمزہ علی عباسی کی فلم ’پروازہے جنون‘ قانونی شکنجے میں پھنس گئی

کراچی: نامورپاکستانی اداکار حمزہ علی عباسی کی فلم ’پرواز ہے جنون‘ ریلیزسے قبل ہی مشکلات کا شکارہوگئی۔

پاکستان ایئرفورس کے تعاون سے بنائی گئی فلم ’پروازہے جنون‘ کا انتظار شائقین بے چینی سے کررہے ہیں۔ فلم میں اداکار حمزہ علی عباسی مرکزی کرداراداکررہے ہیں جب کہ گزشتہ ماہ فلم کا پہلا ٹیزرجاری کیا گیا تھا جس میں حمزہ علی عباسی پاک فضائیہ کے پائلٹ کے روپ میں بے حد شاندار نظر آرہے تھے۔ فلم کے ٹیزر نے ریلیز ہوتے ہی دھوم مچادی تھی تاہم فلم اس وقت مشکلات کاشکار ہوگئی جب فلم کے وارڈ روب اسٹائلسٹ (لباس ڈیزائنر) سومررحمان نے پروڈکشن ہاؤس پر کیس فائل کردیا۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: فلم ’پرواز ہے جنون‘ کا پہلا ٹیزر 

سومررحمان نے ایکسپریس ٹریبیون سے بات کرتے ہوئے کہا کہ فلم کے جاری ہونے والے ٹیزر میں ان کا نام ہی شامل نہیں کیا گیا، کیس میں ہونے والی نئی پیش رفت کے مطابق عدالت نے فلم کے کسی بھی طرح کے تشہیری مواد (ٹریلراورٹیزر) کو ریلیزسے روک دیا ہے۔

ڈیزائنر سومررحمان کی جانب سے ایم ڈی فلمزاورایم ڈی پروڈکشنزکے سربراہ اور وائس پریزیڈنٹ کے خلاف کیس 27 اپریل کوفائل کیا گیا تھا جب کہ کیس کی پہلی سماعت 30 اپریل کو ہوئی تھی۔ سومر رحمان کا کہنا ہے کہ سماعت کے دوران عدالت نے حکم جاری کرتے ہوئے پروڈکشن ہاؤس کواگلی سماعت تک  میرے نام کے بغیرفلم کے ٹریلر، ٹیزر، پوسٹر یا گانے کو جاری کرنے سے روک دیا ہے۔

سومر نے ٹیزر میں ان کا نام شامل نہ کیے جانے پر پروڈکشن ہاؤس سے تحریری معافی اور اپنے بقایا جات کی واپسی کا مطالبہ بھی کیا ہے۔ سومر کا مزید کہنا ہے کہ ایم ڈی پروڈکشن ہاؤس کا ریکارڈ ہے کہ وہ نوجوان فنکاروں کی صلاحیتوں کا استحصال کرتے ہیں۔

فلم کو درپیش قانونی مشکلات اور عدالتی حکم کے پیش نظر ابھی تک یہ واضح نہیں ہوسکا ہے کہ فلم اپنے مقررہ وقت پر ریلیز ہوسکے گی یا نہیں۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: حمزہ علی عباسی کی نئی فلم کا پوسٹر جاری

واضح رہے کہ ہدایت کار حسیب حسن کی فلم ’پرواز ہے جنون‘میں اداکار حمزہ علی عباسی مرکزی کردار اداکررہے ہیں جبکہ دیگر کاسٹ میں اداکارہ ہانیہ عامر، شمعون عباسی، احد رضامیر، شاز خان اور کبریٰ خان شامل ہیں فلم عیدالفطر کے موقع پر ریلیز کی جائے گی۔

The post حمزہ علی عباسی کی فلم ’پروازہے جنون‘ قانونی شکنجے میں پھنس گئی appeared first on ایکسپریس اردو.

سوشل میڈیا کسی کو راتوں رات سپر اسٹار اور ہیرو کو زیرو بنا دیتا ہے، ریجا علی

 لاہور:  اداکارہ وماڈل ریجا علی نے کہا ہے کہ سوشل میڈیا ایک ایسا میڈیم بن چکا ہے جوکسی عام سے شخص کوراتوںرات سپراسٹار اور کسی معروف شخصیت کوہیرو سے ’’زیرو‘‘ بنا دیتا ہے۔ ۔

’’ایکسپریس‘‘ سے گفتگوکرتے ہوئے ریجا علی نے کہا کہ پاکستان فلم انڈسٹری کے نوجوان فلم میکرز کوبھی اب سوشل میڈیا کی اہمیت کوسمجھنا چاہیے۔ یہ ایک ایسا میڈیم بن چکا ہے جوکسی عام سے شخص کوراتوںرات سپراسٹار اور کسی معروف شخصیت کوہیرو سے ’’زیرو‘‘ بنا دیتا ہے۔ ایسے میں بہت سی دلچسپ کہانیاں، فوٹیج اورواقعات بھی ہمیں دیکھنے کو ملتے ہیں۔

اداکارہ نے کہا کہ اگرہمارے نوجوان فلم میکرز اپنی ذہانت کے ساتھ ان واقعات کواپنی فلموں کاحصہ بنائیں تو یقینا اس سے عوام کی دلچسپی بڑھے گی۔ اس وقت فارمولا ٹائپ کی فلموں کی نہیں بلکہ منفرد اوردلچسپ فلموں کی ضرورت ہے۔ پاکستان میں فلم انڈسٹری کا نیا جنم ہورہا ہے اوریہاں جتنے بھی زیادہ سے زیادہ تجربے کیے جائیں گے، اس کا فائدہ ہی ہو گا۔

ریجا علی نے کہا کہ ایک ہی طرح کی کہانیاں ، موضوعات اب فلم  بینوں کو اپنی جانب متوجہ نہیں کر سکتے۔ ہمارے فلم میکرز کو بھی کچھ نیا انداز متعارف کروانا ہوگا وگرنہ فارمولا فلموں کے ذریعہ ترقی اور بحالی کے خواب دیکھنا درست نہیں ہوگا۔

The post سوشل میڈیا کسی کو راتوں رات سپر اسٹار اور ہیرو کو زیرو بنا دیتا ہے، ریجا علی appeared first on ایکسپریس اردو.

مسلم ماڈل کو حجاب کی وجہ سے بیوٹی مہم کا حصہ بننے سے روک دیا گیا 

لندن: مسلم ماڈل ماریا ادریسی نے انکشاف کیا ہے کہ انہیں حجاب پہننے کے باعث بیوٹی (اشتہاری) مہم میں شامل کرنے سے روک دیا گیا تھا۔ 

لندن سے تعلق رکھنے والی 25 سالہ ماریا ادریسی کا کہنا ہے کہ  انہیں حجاب پہننے کی وجہ سے بیوٹی مہم میں شامل نہیں کیا گیا۔ ماریا نے کہا کہ وہ یہ سن کر صدمے کا شکار ہوگئیں کہ انتظامیہ نے انہیں بورڈ میں اس وجہ سے شامل نہیں کیا کہ وہ حجاب پہننے اور مسلمان ہونے کے باعث کم خواتین کو اپنی جانب مائل کر پائیں گی۔

ایک انٹرویو کے دوران ماریا نے انکشاف کیا کہ انہیں میری شخصیت سے اور میری ماڈلنگ کی قابلیت سے کچھ لینا دینا نہیں، ان کا ماننا ہے کہ میں حجاب پہنتی ہوں اس لیے لوگ ان کے پراڈکٹ (لباس) نہیں خریدیں گے۔

ماریا کا کہنا ہے کہ یہ بیوٹی مہم ان کے لیے ایک بہت بڑی ڈیل تھی لیکن انتظامیہ نے ان کے ساتھ معاہدہ کرنے سے انکار کردیا جس کی وجہ سے وہ ابھی تک صدمے کا شکار ہیں تاہم ماریا نے ان کے ساتھ معاہدے سے انکار کرنے والی آوٹ لیٹ اور بیوٹی برانڈ کا نام بتانے سے گریز کیا۔

ماریا ادریسی جانتی ہیں کہ ایک مسلم خاتون کی کیا ذمہ داریاں ہوتی ہیں اور انہیں کیسے نبھایا جاتا ہے، ایک خاتون نے ماریا کو پیغام دیتے ہوئے کہا ان کا تعلق فرانس کے ایک چھوٹے سے گاؤں سے ہے اور ان کے علاقے میں بھی حجاب پہننے والی خواتین کو جنرل اسٹور پر کام پر نہیں رکھتے۔

واضح رہے کہ ماریا نے پہلی بار 2015 میں اس وقت شہرت حاصل کی جب انہوں نے ایچ اینڈ ایم بیوٹی مہم میں حجاب پہن کر شرکت کی جس کے بعد ادریسی کی حجاب میں ملبوس کئی تصاویر  میگزین اور رسالوں کی زینت بنیں۔

The post مسلم ماڈل کو حجاب کی وجہ سے بیوٹی مہم کا حصہ بننے سے روک دیا گیا  appeared first on ایکسپریس اردو.

Meesha Reveals Reason For Deleting Social Media!

It was a shock to everyone when recently Meesha Shafi deleted her Instagram and Facebook accounts. She did not cite a cause for it on her twitter either. They were simply gone. Meesha just gave an interview to the Images and revealed the reason behind this step.

When asked about deleting the accounts, she didn’t hold back and answered straight away:

They have been deactivated for very obvious reasons, one would think. The abuse, threats, bullying and slander that I have faced is the reason I felt the strong need to protect not just myself but my family, especially my two young children who were also being subjected to personal attacks online.

Well we know Meesha didn’t get much support from her colleagues either, she said that she knows that expecting that much from anyone would be a lot:

Believe me, I now know what it takes to speak the truth. And to expect the same from anyone would be expecting too much, it seems. The silence has been hurtful, no doubt. But I chose to stand up alone, and I’m not judging anyone.

She also pointed out that she has not PR team set up to counter rumours being spread about her:

I don’t pay heed to rumours. The slanderous campaign against me has set back the progress of women speaking up and speaking out by hundreds of years. I don’t have some PR mechanism to counter rumours with rumours, slander with slander, trolling with more trolling. All I have with me is the truth. And I believe the truth is a very powerful thing.

Meesha also told the publication that the whole case is now being handled by the law experts!

Source: Images

The post Meesha Reveals Reason For Deleting Social Media! appeared first on Reviewit.pk | Pakistani Drama & Movie Reviews | Ratings | Celebrities | Entertainment news Portal.

Court Stalls ‘Parwaaz Hai Junoon’ Trailer Release

Parwaaz Hai Junoon found itself amidst a legal battle last week when the wardrobe stylist Soomar Rehman sued the production house for not giving him credit for his work, in the latest teasers or any other promotional campaign for that matter.

As a result the court has restrained the release of any promotional content of the film. The case was filed against the production banner, MD Films on Friday, April 27 and the first hearing was held on Monday, April 30.

In a latest interview Soomar said,

“The court has passed an order and stated that the production house is not allowed to release any upcoming teasers, trailers, posters or songs without mentioning my name, at least until the next hearing.”

He further said that he demands a public apology,

“I want MD productions to tender an unconditional written apology. Apart from that I would like to receive my due credit in the film. MD Productions has a record of misusing youngsters’ talent in films.”

The next hearing of the case will be on Monday, May 7th. Looks like there’s still time before any of the fans will be able to see the trailer of this much awaited project.

 

Have anything to add?

 

The post Court Stalls ‘Parwaaz Hai Junoon’ Trailer Release appeared first on Reviewit.pk | Pakistani Drama & Movie Reviews | Ratings | Celebrities | Entertainment news Portal.

There is no rap in Bollywood, everything happens with mutual consent, Rakhi Sawant

Bollywood actress Rakhi Sawant has said that nobody in Bollywood is raped, but here everyone makes consent and voluntary sex.

Bollywood actress Rakhi Sawant, supporting the statement of Coveterographer Suraj Khan regarding Casting Cow, said that ‘Nobody in the Showbiz industry does not target sexually abuse, but also establishes mutual relations with mutual consent’.

Rakhi Sawant said she supports the statement of Suraj Khan, according to Rakhi Sawant, nowadays girls are ready to compromise for making career and are happy to do anything to achieve work.

The actress said that when she was new to the film industry, she was also tried to harass sexually, but she did not come to anybody’s hand and she herself  on the basis of her acting act.

Along with this, he advised new girls to act as well to learn to be patient and present themselves with talent.

The post There is no rap in Bollywood, everything happens with mutual consent, Rakhi Sawant appeared first on Pakistan Showbiz.